قومی

بھارتی فضائیہ کے سربراہ ایئر چیف مارشل بریندر سنگھ دھنوآ کو پاک فضائیہ کے حق میں بولنا مہنگا پڑ گیا۔

بھارتی فضائیہ کے سربراہ ایئر چیف مارشل بریندر سنگھ دھنوآ کو پاک فضائیہ کے حق میں بولنا مہنگا پڑ گیا۔ جمعہ کو بنگلور میں انڈین سوسائٹی آف ایئرو اسپیس میڈیسن کی 57 ویں کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا تھا کہ پاک فضائیہ زیادہ مستعد ہے اور 200 طیاروں کا اضافہ کر کے بھی ہم کارکردگی میں اُس کی برابری نہیں کر سکتے ۔ اس پر سوشل میڈیا پر ملے جلے ، کھٹے میٹھے تبصرے پائے جاتے ہیں۔ ایئر چیف مارشل بی ایس دھنوآ نے سوشل میڈیا میں پائلٹس کی بڑھتی ہوئی دلچسپی کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ان کا کہنا ہے کہ پائلٹس رات گئے تک سوشل میڈیا کی دلدل میں دھنسے رہتے ہیں۔ تادیر جاگتے رہنے سے ان کی نیند پوری نہیں ہو پاتی ۔ بی ایس دھنوآ کا کہنا تھا کہ بہت سے پائلٹس رات کو شراب پیتے ہیں اور صبح کو جب وہ ڈیوٹی کے لیے رپورٹ کرتے ہیں تو شراب کے زیر اثر ہوتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ 2013 ء میں فضائیہ کا ایک جہاز پائلٹ کی شراب نوشی کے باعث کریش ہوا تھا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker